تازہ تر ین
qandeel baloch pic

قندیل بلوچ کے قتل کا مرکزی کردار مفتی عبدالقوی ہے,آر پی او ملتان

Qandeel bloch

قندیل بلوچ کے قتل کا مرکزی کردار مفتی عبدالقوی ہے,آر پی او ملتان

قندیل بلوچ کے قتل کا مرکزی کردار مفتی عبدالقوی ہے,آر پی او ملتان

ملتان) آر پی او ملتان سلطان اعظم تیموری نے کہا ہے کہ ملک کی معروف ماڈل اور سوشل میڈیا سٹار قندیل بلوچ کے قتل کا مرکزی کردار مفتی عبدالقوی ہے. قندیل بلوچ کے قتل کی محرکات کی ابتدا روہیت ہلال کمیٹی کے سابق رکن مفتی عبدالقو ی سے شروع ہوتی ہے.  مفتی عبدالقوی کو ملتا ن پولیس قندیل بلوچ قتل کیس سے کسی صورت بری الزمہ قرار نہیں دے سکتی. اسی بنا پر مفتی عبدالقو ی کو قندیل بلوچ قتل کیس میں شامل تفتیش کیا گیا ہے ۔

یہ بات انہوں نے ہفتہ کے روز اپنے آفس میں;خبر رساں ادارے ملتان سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے بتائی۔ انہوں نے بتایا کہ مفتی عبدالقو ی کے موبائل فون سے ملتان پولیس کوجو معلومات حاصل ہوئی ہیں. ان کے مطابق مفتی عبدالقو ی ہی قندیل قتل کیس کے محرک ہیں. ان کے موبائل فون سے مزید ملنے والی معلومات سے یہ بات سامنے آگئی ہے.  قندیل قتل کیس سے قبل مفتی عبدالقو ی نے سعودی عرب کالز کر کے قندیل بلوچ کے سعودی عرب میں مقیم بھائی کو مہرہ بنا کر استعمال کیا.

جس کے نتیجہ میں قندیل کے قتل کا منصوبہ بنا.  پھر سعودی عرب میں مقیم قندیل کے بھائی نے پاکستان میں مقیم اپنے بھائیوں اور دیگر افراد کے ذریعے مفتی عبدالقو ی کی خواہش اور پیشکش پر قندیل بلوچ کو قتل کیا. لہذا ملتان پولیس مفتی عبدالقو ی کو قندیل قتل کیس سے کیسے بری الزمہ قرار دے سکتی ہے۔ آر پی او ملتان سلطان اعظم تیموری نے قندیل بلوچ قتل کیس میں ملتان پولیس کی جانب سے کیس کی تکمیل میں دیر ہو جانے بارے ایک سوال کے جواب میں بتایا.  ملک کی معروف ماڈل اور سوشل میڈیا سٹار قندیل بلوچ قتل کیس کی تفتیش تقریباَ َ مکمل ہونے کے قریب ہے.

اس کو بہت جلد مکمل کر لیا جائے گا۔ آر پی او ملتان سلطان اعظم تیموری نے ملتان اور گرد و نواح میں بڑھتی ہوئی ڈکیتی ، راہزنی اور چوری سمیت سنگین جرائم کی وارداتوں کو کنٹرول کرنے بارے ایک سوال کے جواب میں بتایا کہ اس سلسلہ میں ہم نے ایک ماسٹر پلان ترتیب دیا ہے. جس کے تحت ملتان میں ہر کالونی ، گلی ، محلہ میں باکردار، نیک نام نوجوانوں پر مشتمل ویجی لینس کمیٹیاں تشکیل دی جا رہی ہیں.

جو اپنی اپنی کالونیوں، گلی محلوں میں آکر نئے بسنے والے افراد پر کڑی نظر رکھیں گے.  ایسی صورت میں کسی بھی قسم کی مشکو ک سرگرمیوں میں ملوث افراد ،مشکوک گاڑیوں کی آمد و رفت اور سنگین جرائم میں ملوث افراد کی اطلاع آر پی او آفس ملتان میں قائم کیے گئے. اطلاعی سینٹر کو دیں گے جس کیلئے ایک ایپلی کیشن سسٹم قائم کیا جا رہا ہے۔ انہوں نے مز ید بتایا کہ ملتان میں سنگین جرائم کو کنٹرول کرنے کیلئے جیسے یوتھ پر مشتمل ویجی لینس کمیٹیاں بنا رہے ہیں.  ویسے ہی تھانوں کی سطح پر گلی ،محلوں میں آپس میں ہونے والے تنازعیات کے حل کیلئے مصالحتی کمیٹیاں بھی قائم کر رہے ہیں. جس میں بزرگ اور نیک نام افراد کو شامل کیا جائے گا