تازہ تر ین
گھریلو نسخوں اور ٹوٹکوں سے بیماری
گھریلو نسخوں اور ٹوٹکوں سے بیماری

گھریلو نسخوں اور ٹوٹکوں سے بیماری خطرناک ہوجاتی ہے۔

گھریلو نسخوں اور ٹوٹکوں سے بیماری

گھریلو نسخوں اور ٹوٹکوں سے بیماری

 

گھریلو نسخوں اور ٹوٹکوں سے بیماری خطرناک ہوجاتی ہے۔

کئی بیماریاں ایسی ہوتی ہیں جنہیں عام طور پر نظر انداز کردیا جاتا ہے اور گھریلو نسخوں اور ٹوٹکوں سے کام چلانے کی کوشش کی جاتی ہے لیکن کچھ ایسی بیماریاں ہیں جنہیں کسی صورت نظر انداز نہیں کرنا چاہیے کیونکہ ایسا کرنا بیماری اتنی خطرناک ہوجاتی ہے جو کبھی کبھی زندگی بھر کا روگ بھی بن جاتا ہے۔گھریلو نسخوں اور ٹوٹکوں سے بیماری خطرناک ہوجاتی ہے۔پرہیز کرنا چاہیئے۔

 

مسوڑوں کی خرابی:

گھریلو نسخوں اور ٹوٹکوں سے

گھریلو نسخوں اور ٹوٹکوں سے

عام طور پر مسوڑوں کی بیماری دانت کے انفکیشن کی وجہ سے سامنے آتی ہے لیکن یہ ضروری نہیں بلکہ کبھی کبھار تو بدہضمی کی وجہ سے گلے میں تیزابیت پیدا ہوتی ہے جس سے مسوڑے درد کرتے ہیں یا پھر دل میں آکسیجن کی کمی بھی مسوڑوں یا سینے کے درد کا باعث بنتی ہے تو فوری طور پر ڈاکٹر کے پاس معائنے کے لیے جائیں۔

 

 

 

غیر متوقع وزن میں کمی:

weight losing patient

کچھ لوگوں کا وزن تیزی سےکم ہونا شروع ہوجاتا ہے جو خطرے کی علامت ہے۔ اس طرح اچانک وزن کا کم ہوجانا خطرے کا الارم ہے۔ یہ ممکن ہے کہ تھائی رائیڈ گلینڈ ضرورت سے زیادہ سرگرم ہوگئے ہیں یا پھر پیٹ کی کوئی خطرناک بیماری بڑھ رہی ہے اس لیے فوری طور پر ڈاکتڑ کے پاس جا کر اس کا علاج کرانا چاہیے۔

 

 

 

تھکاوٹ محسوس ہونا:

tired

اگر آپ بغیر کسی کام کے بھی اکثر تھکا ہوا محسوس کریں تو یہ خطرناک ہے۔ ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ یہ تھکاوٹ آئرن کی کمی کی وجہ سے ہوتی ہے لیکن کبھی کبھی یہ پھیپھڑوں اور دل کی بیماریوں کی وجہ سے بھی رونما ہوتی ہے کیوں کہ جسم کے مختلف اعضا آکسیجن کی مطلوبہ مقدار حاصل نہیں کرپاتے اس لیے جسم معمول کے مطابق کام نہیں کرپاتا جب کہ اس کے علاوہ متلی، وٹامن کی کمی اور تھائی رائیڈ مسائل بھی اس کی وجہ ہو سکتے ہیں۔

 

 

سر کا چکرانا:

headitch

 

اکثر لوگ سر کے چکرانے اور اونگھ کو نظر انداز کردیتے ہیں جو کہ انتہائی نقصان دہ ہے۔ سر چکرانا سانس لینے میں تکلیف کے ساتھ ہوتو دل کی بیماری کی علامت ہے یا پھر یہ گردن کی ہڈی میں تکلیف بھی اس کی وجہ ہوسکتی ہے۔ ایسی صورت میں فوری ڈاکٹر سے معائنہ ضروری ہے۔

 

 

جسم کے مختلف حصوں پر سوجن:

swelling

عام طور پر لوگ اسے نظر اندا کردیتے ہیں جب کہ اس کی وجہ عام طور پر جسم کے مزاحمتی نظام کی خرابی یا پھر شوگر کی بیماریاں ہوتی ہیں جو جسم میں خون کی سپلائی کو متاثر کرتی ہیں۔ ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ اگر آپ شوگر یا پھر وزن کی زیادتی کا شکار ہیں اور جسم پر سوجن بالخصوص پاؤں پرسوجن کم نہیں ہو رہی تو ایسی صورت میں فوری ڈاکٹر سے رجوع کریں کیونکہ تاخیر کی صورت میں پاؤں سے ہاتھ دھونے پڑ سکتے ہیں۔

 

 

قبض کا دیر تک رہنا:

contipation

بہت سے لوگ قبض کی صورت میں ڈاکٹر کے پاس جانے میں شرم محسوس کرتے ہیں اور اپنے طور پر ادویات کا استعمال کر لیتے ہیں جب کہ قبض کی بڑی وجہ لائف اسٹائل اور کھانے پینے کی غلط عادات اور اوقات ہیں لیکن کچھ کیسز میں اس کی وجہ کولون کینسر بھی ہو سکتا ہے اس لیے ضروری ہے کہ اپنے فیملی ڈاکٹر سے مشورہ کرلیا جائے۔

 

 

 

ناخن میں تبدیلی:

nail

آنکھوں کی طرح ناخن بھی انسانی صحت، غذا، وراثتی اور کچھ یقینی بیماریوں سے متعلق آگاہ کرتے ہیں اور یہ جسم میں خون کی کمی اور دیگر بیماریوں کا بھی پتہ دیتے ہیں جیسے مڑے ہوئے ناخن پھیپھپڑوں کی بیماریاں، ناخن کے نیچے خون کے دھبوں کا ہونا خون کے انفیکشن، ناخن پر کالے یا براؤن نشان جلدی کینسر کی علامت ہے۔

 

 

 

پیٹ کی سوجن:

abdominal swelling

40 سال سے کم افراد میں پیٹ میں سوجن کی وجہ پریشانی، غیر صحت مند غذائیں اور آنتوں کی خرابی ہوتی ہے، ڈاکٹرزکے مطابق عام طور پر قبض اور ہیضے کے دوران بھی انسان کو پیٹ پھولا ہوا محسوس ہوتا ہے لیکن اگر ان میں سے کوئی بھی علامت نہ ہوتو اور پھر بھی پیٹ میں سوجن ہو تو یہ خطرے کی علامت ہے اور یہ اوورین کینسر کی نشانی ہوسکتی ہے۔ اکثر ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ اس کینسر کا عام طور پر فوری پتا نہیں چلتا اور اس کو جاننے کی ایک بڑی علامت پیٹ کا پھولا ہونا ہے۔